اسلام نے انسانوں کے ساتھ ساتھ جانوروں کے ساتھ بھی حسن سلوک کا درس دیا ہے

ٹوبہ ٹیک سنگھ ( محمد آصف حسین رانا سے ) اسلام نے انسانوں کے ساتھ ساتھ جانوروں کے ساتھ بھی حسن سلوک کا درس دیا ہے ہمیں چاہیئے کہ ہم جانوروں کے کھانے پینے کا معقول بندوبست کریں،ان خیالات کا اظہار محکمہ لائیوسٹاک کے ریسورس پرسن ڈاکٹرحبیب سلطان نے راوی فاؤنڈیشن کے زیر اہتمام ایک روزہ جانوروں اور انسانوں کی دوستی کے موضوع پر منعقدہ سیمینار کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کیا،تقریب کے مہمان خصوصی ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر (ر) ذیشان لبھا مسیح اور فادر بونی مینڈس تھے جبکہ تقریب کی صدارت کے فرائض راوی فاؤنڈیشن کی چیئرپرسن مسز رفیعہ اشفاق نے سرانجام دئیے،تقریب سے ڈپٹی ڈسٹرکٹ آفیسر لائیوسٹاک ڈاکٹر عاطف طفیل،ڈپٹی ڈسٹرکٹ آفیسر لائیوسٹاک کمالیہ ڈاکٹر سید ذیشان،ڈپٹی ڈائریکٹر ایس ایچ ڈی فادر سائمن خورشید،پریس پریسٹ ریورنڈ فادر خالد یوسف،سپیرئیر کالج کے محمد وسیم اور رشید جلال نے بھی خطاب کیا،تقریب سے خطاب کرتے ہوئے مقررین نے شرکاء کو بتایا کہ جانور بے زبان ہوتے ہیں جبکہ جاندارتو اپنی تکلیف سے بول کر آگاہ کرسکتے ہیں مگر بے زبان اس سے عاری ہوتا ہے،انہوں نے کہا کہ یہ بات بڑی خوش آئند ہے کہ جانوروں کو بے دردی سے مارنے کے خلاف قانون پاس ہوچکا ہے اور اب کتے جیسے وفادار جانور کو بھی زہر دے کر نہیں مارا جاسکے گا،مقررین نے کہا کہ اگر کسی محلے سے گاؤں میں ہلکان والا کتا یا کوئی دوسرا جانور آپ کو نظر آئے تو آپ فوری طور پر محکمہ لائیوسٹاک کو آگاہ کریں تاکہ مذکورہ جانور کو ہسپتال لاکر اس کا علاج کیا جاسکے،مقررین نے کہا کہ کتنے افسوس کا مقام ہے کہ ہم جانوروں کو بے دردی سے مار دیتے ہیں چاہیئے تو یہ کہ ہم ان جانوروں سے پیار کریں اور ان کے کھانے پینے کا معقول بندوبست کریں،مگر آج کے دور میں اس کے برعکس الٹ ہے اور ہم تھوڑے سے فائدے کی خاطر جانوروں کو شکار کرکے کھاجاتے ہیں،مقررین نے کہا کہ اب کوئی بھی شخص کسی بھی جانور کو خواہ وہ آوارہ ہی کیوں نہ ہو مار نہیں سکتا اگر ایسا کہیں ہورہا ہے تو آپ اس کی اطلاع یا تو لائیوسٹاک کو یا پھر محکمہ پولیس کو کریں اس کے خلاف فوری ایکشن لیا جائے گا،تقریب کے اختتام پر شرکاء کو تواضع پرتکلف کھانے سے کی گئی۔

مکمل پڑھیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button