بات ہوگی تو گھر کے مالک سے ہوگی، مالی یا باہر کھڑے ٹھیلے والے سے نہیں: سابق صدر پاکستان عارف علوی

حافظ آباد (شہزاد منظور آرائیں) پاکستان تحریک انصاف کے رہنما و سابق صدر عارف علوی نے کہا ہے کہ بات ہوگی تو گھر کے مالک سے ہوگی، مالی یا باہر کھڑے ٹھیلے والے سے نہیں ہوگی۔

فیصل آباد میں خطاب کرتے ہوئے عارف علوی نے دعویٰ کیا کہ عمران خان کو کہہ رہے ہیں ڈیل کرو، ملک چھوڑ جاو لیکن انہوں نے کہا کچھ بھی ہوجائے ملک نہیں چھوڑوں گا۔

ان کا کہنا تھاکہ اسٹیک ہولڈر سے بات کرنی ہے نان اسٹیک ہولڈر سے نہیں، غصہ، نفرت ختم کریں اور درگزر سے کام لیں، بانی پی ٹی آئی کے آزاد ہونے پر خطرے کا خوف نکال دیں، وہ کہہ چکے ہیں آزاد ہوکر درگزر سے کام لیں گے۔

انہوں نے کہا کہ ملک میں قانون کی بالادستی بحال، مینڈیٹ واپس اور بانی پی ٹی آئی کو رہا کریں، ہر ایک پر غداری کا لیبل لگادیتے ہیں، فیض احمد فیض کو بھی نہیں چھوڑا۔

عارف علوی کا کہنا تھاکہ مذاکرات کریں بالکل صحیح مشورہ ہے لیکن کس سے مذاکرات کریں؟ دھاندلی سے اقتدارمیں آنے والوں سے ؟ تو ان کو اتھارٹی تو دے دو، یہ جو فارم 47 والے ہیں یہ تو ٹھیلے والے بھی نہیں ہیں، ٹھیلے والوں کی بھی کوئی عزت ہوتی ہے۔

ان کا مزید کہنا تھاکہ فارم 47 والے تو 50 آدمیوں کے درمیان جانے کے لائق نہیں، بات ہوگی تو گھر کے مالک سے ہوگی، مالی یا باہر کھڑے ٹھیلے والے سے نہیں ہوگی۔

مکمل پڑھیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button